بھارتی میڈیا باز نہ آیا،مولانا خادم حسین رضوی کی وفات پر صحافتی اقدار کو پس پشت ڈال دیا

نئی دہلی(سی این پی)بھارتی میڈیا کی روایت ہے کہ اس نے پاکستان کے خلاف زہر اگلنے کا کوئی موقع ہاتھ سے جانے نہیں دیا،کشمیر کا مسئلہ ہو،آبی جارحیت ہو یا بھارت میں مسلمانوں پر مظالم ڈھانے کا معاملہ ہو یا کنٹرول لائن پر بھارتی جارحیت انڈین میڈیا نے ہمیشہ پاکستان کے خلاف جھوٹا پراپیگنڈہ کیا،منفی خبریں چلائیں اور صحافتی اقدار کو پس پشت ڈال کر حقائق کو مسخ کیا،گزشتہ روزتحریک لبیک پاکستان کےسربراہ،ممتاز عالم دین اور شعلہ بیان مقرر مولاناخادم حسین رضوی کی وفات پر بھی بھارتی میڈیا حسب روایت اپنی روش پر قائم رہا اور مولانا خادم حسین رضوی کی وفات کی خبر تمسخرانہ انداز میں پیش کی اور خوشی کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ بھارت کیخلاف بات کرنے والی آواز ہمیشہ کےلئے خاموش ہو گئی،بھارتی میڈیا نے ممتاز عالم دین کی اچانک وفات پر بھی سیاست کی اور بھارتی میڈیا کے اینکرز گلا پھاڑ پھاڑ کر چیختے نظر آئے کہ مودی کے خلاف اور کشمیروں کے حق میں بات کرنے والا دنیا سے رخصت ہو چکا ہے،مولانا خادم حسین رضوی کے بھارت، مودی کے خلاف بیانات اور آزادی کشمیر کے حوالے سے مختلف کلپ چلا کر منفی پراپیگنڈہ کیا جاتا رہاہے؛

اپنا تبصرہ بھیجیں