ریلوے ہسپتال انتظامیہ کی مبینہ غفلت،شوگر کے مریض کو وفات کے بعد کرونا میں ڈال دیا

راولپنڈی (سی این پی ) اسلامک انٹرنیشنل میڈیکل کالج ٹرسٹ ریلوے ہسپتال انتظامیہ کی مبینہ غفلت ریلوے ریٹائرڈ ملازم عبدالحق جو چند روز قبل شوگر کی وجہ سے ریلوے ہسپتال داخل ہوا جوگزشتہ روز انتقال کرگیا۔وفات کے بعد عبدالحق کو کورونا میں ڈال کر لواحقین کو میت دینے سے انکار کر دیا مریض کے لواحقین کے مطابق مریض کے داخلے سے لے کر وفات تک تمام گھر والے مریض سے روزانہ ملتے تھے، مریض کا سات تاریخ کو کورونا ٹیسٹ بھی ہوا تھا جو نیگیٹو آیا تھا، جس کی رپورٹ بھی انکے پاس موجود ہے پھر بھی عبدالحق ریٹائرڈ ریلوے ملازم کومرنے کے چند گھنٹے بعد کورونا میں ڈال کر لواحقین کو لاش دینے سے انکار کر دیا اور پولیس کو بھی بلوا لیا جس پر لواحقین مشتعل ہو گئے جبکہ ڈاکٹرز اس سارے عمل کے دوران سردی سے بچنے کے لئے چھت پر دھوپ سینکتے رہے اور چار گھنٹے کی منت سماجت اور میت کو ہسپتال انتظامیہ کی جانب سے ایمر جنسی کے سامنے بے یار و مدد گار پھنکنے کے بعد میت کو زبردستی سٹریچر پر ڈال کر گھر رتہ امرال میلاد نگر لے گئے جسے تمام اہل علاقہ کی موجودگی میں سپرد خاک کر دیا گیا۔ لواحقین کی جانب سے وفاقی وزیر برائے ریلوے شیخ رشید سے اس سنگین معاملے پر انتظامیہ سے باز پرس اور داد رسی کی اپیل کی گئی ہے۔ اہلیان علاقہ نے بھی شیخ رشید سے اپنے حلقے میں ہونے والے اس ظلم کا حساب لینے کی استدعا کی ہے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں