قلندیا چیک پوسٹ پر شہید کی گئی فلسطینی خاتون کی شناخت کرلی گئی

غزہ(سی این پی) فلسطینی وزارت صحت کے حکام نے کہا ہے کہ گزشتہ بدھ کو مقبوضہ بیت المقدس میں قلندیا چیک پوسٹ پر قابض اسرائیلی فوج کے ہاتھوں بغیر کسی جرم کے شہید کی گئی فلسطینی خاتون کی شناخت کر لی گئی ہے۔تفصیلات کے مطابق وزارت صحت کے حکام کا کہنا تھا کہ قلندیا چیک پوسٹ پر اسرائیلی فوجیوں کی فائرنگ سے شہید ہونے والی 50 سالہ خاتون کی شناخت نایفہ محمد کعابنہ کے نام سے کی گئی ہے، جو غرب اردن کے وسطی شہرام اللہ کے نواحی علاقے رامون سے تعلق رکھتی ہے۔میڈیا رپورٹس کے مطابق اسرائیلی فوج کی طرف سے دعوی کیا گیا تھا کہ فلسطینی خاتون کو اس وقت گولی ماری گئی جب اس نے چاقو سے فوجیوں پر حملے کی کوشش کی تاہم جائے وقوعہ کی ایک فوٹیج سامنے آئی ہے، جس میں خاتون کو قابض فوجیوں سے کئی گز دور دیکھا جاسکتا ہے اور اس کے ہاتھ میں کوئی چھری چاقو نہیں۔انسانی حقوق کی عالمی تنظیم ایمنسٹی نے اسرائیلی فوج کی طرف فلسطینی خاتون کی شہادت کی شدید مذمت کرتے ہوئے کہا کہ فلسطینی خاتون کسی بھی اعتبار سے اسرائیلی فوج کے لیے خطرہ نہیں تھی۔ وہ ایک نہتی خاتون تھی، جسے قابض فوج نے بغیر کسی جسم کے گولیاں مار کر شہید کیا ہے۔انسانی حقوق کا کہنا تھا کہ اسرائیلی فوج نے نہ صرف فلسطینی خاتون کو بغیر کسی جرم کے گولیاں ماریں بلکہ اسے زخمی کرنے کے بعد امدادی کارکنوں کی طرف سے مدد کی فراہمی میں بھی رکاوٹ ڈالی۔

اپنا تبصرہ بھیجیں