ایف بی آر نے سیلز ٹیکس سے متعلقہ نیک نیتی کی بناء پر شنا ختی کارڈ کے حوالے سے جنرل آرڈر جاری کر دیا

اسلام آباد(سی ین پی)فیڈرل بور ڈ آف ریوینیو نے سیلز ٹیکس جنرل آرڈر نمبر 106/2019جاری کیا ہے جس میں کہا گیا ہے کہ رجسٹرڈ شخص کو سیلز ٹیکس ایکٹ 1990کی شق 23کے تحت خریدار کی شناخت کے لئے رپورٹ کئے گئے این ٹی این یا این آئی سی کے حوالے سے درپیش مشکلات کے سبب یہ حکم نامہ جاری کیا جا رہا ہے کہ سپلائر کی طرف سے رجسٹرڈ نہ ہونے والے خریدار کی شناخت کے لئے رپورٹ کئے گئے این آئی سی یا این ٹی این کو نیک نیتی تصور کیا جائے گا بشرطیکہ ٹیکس انوائیس ایکٹ کی شق 23bکو پورا کرتا ہو اور ٹیکس انوایس بشمول سیلز ٹیکس کی ادائیگی رجسٹرڈ نہ ہونے والے افراد کی طرف سے سپلائر کے کاروباری اکاؤنٹ میں جمع کرائی ہو اور خریدار کی طرف سے فراہم کردہ این آئی سی نادرہ سے تصدیق شدہ ہو اور این آئی سی یا این ٹی این فروخت کنندہ کے کسی بھی ملازم یا ساتھی کا نہ ہوجیسا کہ انکم ٹیکس آرڈینینس 2001 میں درج ہے ۔ رجسٹرڈ فرد کو شناختی کارڈ کے حوالے سے کوئی بھی شو کاز نوٹس ممبر آئی آر آپریشنز ایف بی آر کی اجازت کے بغیر نہ دیا جائے

اپنا تبصرہ بھیجیں